ملت ٹائمز کی خبر کا اثر:پی ایف آئی کی حمایت میں آئے مولانا محمود مدنی ،پابندی کی شدید مذمت

webadmin's picture
Wed, 03/07/2018 - 13:03 -- webadmin

نئی دہلی۔6مارچ(ملت ٹائمز) ملک کی ابھرتی ہوئی تنظیم پاپولر فرنٹ آف انڈیا پر جھارکھنڈ میں عائد کی گئی پابندی کی جمعیت علماءہند کے جنرل سکریٹری مولانا محمود مدنی نے شدید مذمت کی ہے ۔ایک پریس ریلیز جاری کرکے مولانا مدنی نے کہاکہ دہشت گردی کا الزام کوئی مذاق نہیں ہے کہ جب جس پر چاہئے لگادیا جائے ۔سبھی لوگ دہشت گردی کے خلاف لڑرہے ہیں ۔ پریس ریلیز میں لکھاگیاہے کہ جھارکھنڈ میں ہجومی تشدد کے کئی واقعات پیش آئے ہیں ، مختلف رہنما نفر انگیز بیانات دے رہے ہیں لیکن ان کے خلاف کاروئی کرنے کی بجائے ایک سماجی وفلاحی تنظیم پر رگھو داس سرکار نے پابندی لگادی ہے جو غیر دستور ی اور آئین کے خلاف ہے ۔ ہم آپ کو بتادیں کہ گذشتہ ماہ پاپولر فرنٹ آف انڈیا پر جھارکھنڈ کی حکومت نے پابندی لگارکھی ہے ۔جھارکھنڈ کے وزیر اعلی کی ویب سائٹ پر ایک پریس ریلیز جاری کرکے یہ اطلاع دی گئی تھی کہ پاپولر فرنٹ آف انڈیا پر دہشت گردتنظیموں سے تعلق رکھنے کا الزام ہے اس لئے اس پر پابندی لگائی جاتی ہے ۔جوا ب میں پی ایف آئی کا احتجاج جاری ہے اور پہلی مرتبہ کسی بھی ملی رہنماءنے اس پابندی کی مذمت کی ہے ۔ واضح رہے کہ ملت ٹائمز نے اپنی کئی خبر میں اس موضوع کو اٹھاتے ہوئے لکھاتھاکہ پی ایف آئی پر پابندی عائد کی جاچکی ہے لیکن ہمارے کسی بھی ملی قائد نے اب تک اس کی مذمت نہیں کی ہے جس کے بعد ملک کی موقر تنظیم جمعیة علماءہند کے جنر ل سکریٹری مولانا محمود مدنی کا یہ بیان سامنے آیاہے۔

Addthis: 
Topic: 

News Bulletin